Search results

  1. sehrix

    Urdu Poetry اکبر الہ آبادی منتخب اشعار

    بینی اور نتھ کا وہ عالم کہ چھدے دل جس سے حور چنی کی جھلک گوہر غلطان پری نظیر اکبرآبادی بھرے ہیں اس پری میں اب تو یارو سر بسر موتی گلے میں کان میں نتھ میں جدھر دیکھو ادھر موتی نظیر اکبرآبادی غضب وہ چنچل کی شوخ بینی پھر اس پہ نتھنوں کی نکتہ چینی پھر اس پہ نتھ کی وہ ہم نشینی پھر اس پہ موتی پھڑک...
  2. sehrix

    Urdu Poetry کون اس راہ سے گزرتا ہے

    کون اس راہ سے گزرتا ہے دل یوں ہی انتظار کرتا ہے دیکھ کر بھی نہ دیکھنے والے دل تجھے دیکھ دیکھ ڈرتا ہے شہرِ گل میں کٹی ہے ساری رات دیکھیے دن کہاں گزرتا ہے؟ دھیان کی سیڑھیوں پہ پچھلے پہر کوئی چپکے سے پاؤں دھرتا ہے دل تو میرا اداس ہے ناصرؔ شہر کیوں سائیں سائیں کرتا ہے ناصر کاظمی Continue reading...
  3. sehrix

    Urdu Poetry دل میں رہتا ہے کوئی دل ہی کی خاطِر خاموش

    دل میں رہتا ہے کوئی، دل ہی کی خاطِر خاموش جیسے تصویر میں بیٹھا ہو مصوّر خاموش دل کی خاموشی سے گھبرا کے ُاٹھاتا ہوں نظر ایک آواز سی آتی ہے، مسافر! خاموش اِس تعارف کا نہ آغاز، نہ انجام کوئی کر دیا ایک خموشی نے مجھے پھر خاموش کچھ نہ سُن کر بھی تو کہنا ہے کہ ہاں، سنتے ہیں کچھ نہ کہہ کر بھی تو...
  4. sehrix

    Urdu Poetry میں کھل نہیں سکا کہ مجھے نم نہیں ملا

    میں کھل نہیں سکا کہ مجھے نم نہیں ملا ساقی مرے مزاج کا موسم نہیں ملا مجھ میں بسی ہوئی تھی کسی اور کی مہک دل بجھ گیا کہ رات وہ برہم نہیں ملا بس اپنے سامنے ذرا آنکھیں جھکی رہیں ورنہ مری انا میں کہیں خم نہیں ملا اس سے طرح طرح کی شکایت رہی مگر میری طرف سے رنج اسے کم نہیں ملا ایک ایک کرکے لوگ بچھڑتے...
  5. sehrix

    Urdu Poetry ہوا ہے دل مرا مشتاق تجھ چشم شرابی کا

    ہوا ہے دل مرا مشتاق تجھ چشم شرابی کا خراباتی اُپر آیا ہے شاید دن خرابی کا کیا مدہوش مجھ دل کوں آ نیندی نین ساقی نے عجب رکھتا ہے کیفیّت زمانہ نیم خوابی کا خطِ شب رنگ رکھتا ہے عداوت حسن خوباں سے کہ جیوں خفّاش ہے دشمن شعاعِ آفتابی کا نہ جاؤں صحن گلشن میں کہ خوش آتا نئیں مجکوں بغیر از ماہ رو ہرگز...
  6. sehrix

    Urdu Poetry وہ بہتے دریا کی بے کرانی سے ڈر رہا تھا

    وہ بہتے دریا کی بے کرانی سے ڈر رہا تھا شدید پیاسا تھا اُور پانی سے ڈر رہا تھا نظَر نظَر کی یقیں پسَندی پہ خوش تھی' لیکن بدَن بدَن کی گُماں رسانی سے ڈر رہا تھا سبھی کو نیند آچُکی تھی یوں تو پَری سے مِل کر مگر وہ اِک طِفل جو کہانی سے ڈر رہا تھا لرزتے ہونٹوں سے گِر پڑے تھے حروف اِک دِن دِل اپنے...
  7. sehrix

    Urdu Poetry بے عمل کو دنیا میں راحتیں نہیں ملتیں

    بے عمل کو دنیا میں، راحتیں نہیں ملتیں دوستو! دعاؤں سے، جنتیں نہیں ملتیں اس نئے زمانے کے، آدمی ادھورے ہیں صورتیں تو ملتی ہیں، سیرتیں نہیں ملتیں اپنے بل پہ لڑتی ہے، اپنی جنگ ہر پیڑھی نام سے بزرگوں کے، عظمتیں نہیں ملتیں جو پرندے آندھی کا سامنا نہیں کرتے ان کو آسمانوں کی "رفعتیں" نہیں ملتیں اس چمن...
  8. sehrix

    Urdu Poetry ستارہ وار ترے غم میں جل بجھا ہوں میں

    ستارہ وار ترے غم میں جل بجھا ہوں میں یہ کس طرح کی اذیت میں مبتلا ہوں میں میں آدھا جملۂ خوش کن تھا آدھا مصرعۂ تر پر احتیاط سے "برتا" نہیں گیا ہوں میں مرے وجود میں رکھی یہ روشنی کیا ہے یہ کس چراغ کی مانند جل رہا ہوں میں وہ اپنا عکس مری چشمِ تر میں دیکھتی تھی تجھ آئینے سے بہت معتبر رہا ہوں میں کہ...
  9. sehrix

    Urdu Poetry نہ سماعتوں میں تپش گھلے نہ نظر کو وقف عذاب کر

    نہ سماعتوں میں تپش گُھلے نہ نظر کو وقفِ عذاب کر جو سنائی دے اُسے چپ سِکھا جو دکھائی دے اُسے خواب کر ابھی منتشر نہ ہو اجنبی، نہ وصال رُت کے کرم جَتا! جو تری تلاش میں گُم ہوئے کبھی اُن دنوں کا حساب کر مرے صبر پر کوئی اجر کیا مری دو پہر پہ یہ ابر کیوں؟ مجھے اوڑھنے دے اذیتیں مری عادتیں نہ خراب کر...
  10. sehrix

    Urdu Poetry ایسے الفت کا ڈھب سکھایا گیا

    ایسے الفت کا ڈھب سکھایا گیا لفظ پہلا ہی رب سکھایا گیا ہنسنا کب ہے کہاں پہ رونا ہے مجھ کو بچپن میں سب سکھایا گیا سب فرشتوں کو عاجزی کا ہنر کون جانت ہے کب سکھایا گیا کیسے رہنا ہے دشت میں تنہا مجھ کو ہجرت کی شب سکھایا گیا یعنی یہ عشق بھی ہے کار زیاں یعنی یہ بے سبب سکھایا گیا محمد مبشر میو Continue...
  11. sehrix

    Urdu Poetry کچھ لوگ تغیر سے ابھی کانپ رہے ہیں

    کچھ لوگ تغیر سے ابھی کانپ رہے ہیں ہم ساتھ چلے تو ہیں مگر ہانپ رہے ہیں نعروں سے سیاست کی حقیقت نہیں چھپتی عریاں ہے بدن لاکھ اسے ڈھانپ رہے ہیں کیا بات ہے شہروں میں سمٹ آئے ہیں سارے جنگل میں تو گنتی کے ہی کچھ سانپ رہے ہیں مکڑی کہیں مکھی کو گرفتار نہ کر لے وہ شوخ نگاہوں سے مجھے بھانپ رہے ہیں یہ...
  12. sehrix

    Urdu Poetry تم کو دیکھیں کہ تم سے بات کریں

    تم مخاطب بھی ہو قریب بھی ہو تم کو دیکھیں کہ تم سے بات کریں فراق گورکھپوری Continue reading...
  13. sehrix

    Urdu Poetry پسینے پسینے ہوئے جا رہے ہو

    پسینے پسینے ہوئے جا رہے ہو یہ بولو کہاں سے چلے آ رہے ہو ہمیں صبر کرنے کو کہہ تو رہے ہو مگر دیکھ لو خود ہی گھبرا رہے ہو بری کس کی تم کو نظر لگ گئی ہے بہاروں کے موسم میں مرجھا رہے ہو یہ آئینہ ہے یہ تو سچ ہی کہے گا کیوں اپنی حقیقت سے کترا رہے ہو سعید راہی Continue reading...
  14. sehrix

    Urdu Poetry جنت کی آرزو ہے نہ حوروں کی چاہ ہے

    جنت کی آرزو ہے نہ حوروں کی چاہ ہے محشر میں بھی تمہیں پہ ہماری نگاہ ہے اب اُن سے دور دور کی کچھ رسم و راہ ہے یہ دوستی نہیں ہے فقط اک نباہ ہے صبحِ شبِ وصال ہے غصہ بھی شرم بھی ترچھی نگاہ ہے کبھی نیچی نگاہ ہے عاشق کی بے کسی کا تو عالم نہ پوچھیے مجنوں پہ جو گذر گئی صحرا گواہ ہے مظلوم بن کے آئے تو...
  15. sehrix

    Urdu Poetry دل پا کے اس کی زلف میں آرام رہ گیا

    دل پا کے اُس کی زلف میں آرام رہ گیا درویش جس جگہ کہ ہوئی شام رہ گیا جھگڑے میں ہم مبادی کے یاں تک پھنسے کہ آہ مقصود تھا جو اپنے تئیں کام رہ گیا ناپختگی کا اپنی سبب اُس ثمر سے پوچھ جلدی سے باغباں کی جو وہ خام رہ گیا صیّاد تو تو جا ہے پر اُس کی بھی کچھ خبر جو مرغِ ناتواں کہ تہِ دام رہ گیا قسمت تو...
  16. sehrix

    Urdu Poetry ابن مریم ہوا کرے کوئی

    ابنِ مریم ہوا کرے کوئی میرے دکھ کی دوا کرے کوئی شرع و آئین پر مدار سہی ایسے قاتل کا کیا کرے کوئی چال جیسے کڑی کمان کا تیر دل میں ایسے کے جا کرے کوئی بات پر واں زبان کٹتی ہے وہ کہیں اور سنا کرے کوئی بک رہا ہوں جنوں میں کیا کیا کچھ کچھ نہ سمجھے خدا کرے کوئی نہ سنو گر برا کہے کوئی نہ کہو گر برا کرے...
  17. sehrix

    Urdu Poetry جی جان کا تھا اس میں زیاں چھوڑ دیا ہے

    جی جان کا تھا اس میں زیاں چھوڑ دیا ہے ہاں چھوڑ دیا، عشقِ بُتاں چھوڑ دیا ہے ہر چند کہ تھا وِردِ زباں چھوڑ دیا ہے اب ذکر تیرا دُشمنِ جاں چھوڑ دیا ہے کیوں میرے نشیمن کا نشاں چھوڑ دیا ہے کس دن کے لیے برقِ تپاں چھوڑ دیا ہے اس عشق نے لا کر ہمیں سرحد میں جنوں کی بے یار و مددگار کہاں چھوڑ دیا ہے کیا...
  18. sehrix

    Urdu Poetry زباں سے نکلے ہوئے لفظ بے صدا نہ کرو

    زباں سے نکلے ہوئے لفظ بے صدا نہ کرو نہ سن رہا ہو کوئی بات جب، کہا نہ کرو ہر ایک شے پہ ہو نقد و نظر کی تیشہ زنی شعور اتنا بصیرت سے آشنا نہ کرو تمام عمر کی کوشش بھی رائیگاں جائے دراز اتنا مرادوں کا سلسلہ نہ کرو خود اپنے زخموں سے ہر شخص چُور ملتا ہے کسی کو اپنے مصائب میں مبتلا نہ کرو دل اک صحیفۂ...
  19. sehrix

    Urdu Poetry رائیگانی تو مرے خواب کہاں پھینکتی ہے

    رائیگانی تُو مِرے خواب کہاں پھینکتی ہے کیا وہیں، خلق جہاں کارِ زیاں پھینکتی ہے گھر کا آنگن کوئی مدفن تو بہاروں کا نہیں خشک پتے یہاں کیوں لا کے خِزاں پھینکتی ہے خاک کو خاک بناتی ہے، چلو مان لیا موت لیکن لب و رخسار کہاں پھینکتی ہے دل کے بازار میں پہلے سے ہے مندی کا چلن کیوں محبت یہاں سرمایۂ جاں...
  20. sehrix

    Urdu Poetry ایک تھا شخص زمانہ تھا کہ دیوانہ بنا

    ایک تھا شخص زمانہ تھا کہ دیوانہ بنا ایک افسانہ تھا، افسانے سے افسانہ بنا اک پری چہرہ کہ جس چہرہ سے آئینہ بنا دل کہ آئینہ در آئینہ پری خانہ بنا خیمۂ شب میں نکل آتا ہے گاہے گاہے ایک آہو کبھی اپنا کبھی بے گانہ بنا ہے چراغاں ہی چراغاں سرِ عارض سرِ جام رنگِ صد جلوۂ جانانہ، صنم خانہ بنا ایک جھونکا ترے...
Top